منفی 10 ڈگری درجہ حرارت میں گم ہوجانے والے 2 سیاح، پوری رات کیا کر کے گزاری کہ صبح تک صحیح سلامت بچ گئے؟

سکاٹ لینڈ میں دو افراد برف پوش پہاڑوں پر سکیننگ کرنے گئے لیکن خراب موسم کی وجہ سے حدنظر کم ہونے کے باعث بھٹک گئے۔ منفی 10ڈگری سینٹی گریڈ کی خون جما دینے والی سرد میں وہ تمام رات پہاڑ پر رہے

اور ایسے طریقے سے خود کو سرد ہواﺅں سے بچایا کہ سن کر آپ بھی ان کی حاضر دماغی کی داد دیں گے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق ان دونوں سکائیرز کی عمریں 40کی دہائی میں تھیں۔ جب وہ پہاڑ پر بھٹک گئے اور رات پڑ گئی

توانہوں نے برف میں ایک گڑھا کھودا اور اس کے اندر اتر کر ایک دوسرے سے لپٹ کر دبکے بیٹھ گئے۔
رپورٹ کے مطابق ان میں سے ایک نے رات ساڑھے 8بجے اپنی بیوی کو موبائل فون پر پیغام بھیجا کہ وہ بھٹک گئے ہیں اور ایمرجنسی سروسز کو اطلاع کرو۔ اس کی اہلیہ نے ایمرجنسی کو اطلاع کی جنہوں نے 9بجے ان دونوں کی تلاش کا آپریشن شروع کیا اور صبح پونے 4بجے ہیلی کاپٹر میں سوار متلاشی ٹیم کو یہ دونوں لوگ اس گڑھ میں موجود نظر آ گئے۔ یہ خود بھی اپنے اوپر ہیلی کاپٹر دیکھ کر اٹھے اور ہاتھ ہلاکر اشارہ کرنے لگے۔واضح رہے کہ یہ دونوں 4ہزار 295فٹ کی بلندی پر موجود تھے جہاں انتہائی سرد ہوا چل رہی تھی۔ اگر یہ لوگ گڑھا کھود کر اس میں نہ بیٹھتے تو صبح ہونے تک زندہ نہ بچ پاتے۔