تخم ملنگا کا ایک چمچ کھائے اور گوشت کی طاقت پائیں

تخم ملنگا ایک مشہور اور گرمیوں میں کثرت سے استعمال ہونے والے بیج ہے۔ جس کی افادیت بہت زیادہ ہے اور اس کے استعمال سے بہت سارے فوائد حاصل کئے جا سکتے ہیں ۔ تخم ملنگا کا استعمال عام طور پر مشروبات میں ہوتا ہے جس کی وجہ سے مشروبات میں مٹھاس در آتی ہے اور ا س کے ساتھ گرمیوں میں فوری طور پر اس سے ٹھنڈک بھی حاصل ہوتی ہے ۔ اس کو وزن کم کرنے کے لئے بھی استعمال کیا جاتا ہے

لیکن اس کے ساتھ جسم میں طاقت پیدا کرنے کے لئے اس کا استعمال بہت ہی فائدہ مند ہے ۔
تخم ملنگا اس کو بلنگا بھی کہتے ہیں اس کا استعمال عموما مشروبات میں ہوتا ہے کیونکہ اس کی تاثیر ٹھنڈی ہوتی ہے اور اس کے استعمال سے جسم میں موجود گرمائش کا خاتمہ ہوتا ہے ۔اس کے استعمال سے معدہ کی کارکردگی بہتر ہوتی ہے تیزابیت میں کمی آتی ہے۔ تخم بلنگا تلسی پودے کی ہی ایک قسم ہے لیکن اس کے پتوں میں تھوڑی سی کھٹاس ہوتی ہے عموما اس کا پودا 4 فٹ تک ہوتا ہے ۔

اس میں موجود اومیگا تھری کھانا ہضم کرنے میں مدد کرتا ہے اور تیزابیت بھی ختم کرتا ہے۔
اس کے علاوہ یہ پیٹ اور آنتوں کی صفائی کرتا ہے،نیند کو بہتر بناتا ہے، مدافعتی نظام کو مزید بہتر کرتا ہے۔شوگر کے مریض اور عام افراد جو وزن بڑھ جانے کی وجہ سے پریشان ہیں، آج ہم آپ کو ایک ایسا نسخہ بتائیں گے، جس پر عمل کر کے آپ صرف 7 دن میں اپنی چربی پگھلا سکتے ہیں۔ یہ نسخہ لیموں سے بنایا گیا ہے جو کہ چربی پگھلانے کے لئے انتہائی شاندار پھل ہے اور اس کے استعمال سے میٹابولزم تیز ہونے کے ساتھ وزن کم ہوتا ہے۔

شربت بنانے کے لئے درج ذیل اجزاء چاہئے ہوتے ہیں

ڈیڑھ گلاس پانی
ایک چمچ تخم ملنگ
ایک چمچ شہد
ڈیڑھ چمچ لیموں کا پانی
ان تمام اشیاء کو اچھ ی طرح مکس کر لیں اور دن کے کسی وقت بھی اس کا استعمال کریں آپ اپنے جسم میں پیدا ہونے والی طاقت کو خود محسوس کریں گے

دوران حمل کیا کھایا جائے جس سے بچہ صحت مند اور خوبصورت ہو

ان بننا ہر عورت کا ایک خواب ہوتا ہے اور شادی کے فورا بعد شدید تر خواہش بن جاتی ہے حتی کہ اگر خواتین کا بس چلے تو نو مہینے تک انتظار ہی نہ کریں ۔ لیکن معاشرتی رجحان کی وجہ سے ان کی یہ بھی خواہش ہوتی ہےکہ لڑکا پیدا ہو اور ہو بھی گورا چھٹا

، اس کے لئے عورتیں ہر طرح کے کام کرتی ہے اور اس کی وجہ عورتوں کا قصور نہیں بلکہ معاشرہ کا رجحان اور جبر ہے ورنہ کوئی بھی ماں اپنی کسی بھی اولاد کو کبھی نہ دھتکارے اور کبھی بھی کوئی فرق پیدا نہ ہونے دیں لیکن برا ہو ہمارے سماج کا کہ بچوں کی پیدائش میں جنس کا ذمہ دار بھی عورت کو ٹھہرایا جاتا ہے حالانکہ لڑکا یا لڑکی ہونے کا دارومدار مرد پر ہوتا ہے نا کہ عورت پر۔

ایسے بہت سے پھل ہے جن کے کھانے سے بچہ اور ماں دونوں صحت مند رہتے ہیں لیکن آج ہم آپ کو ایک خاص پھل کے بارے میں بتائیں گے جس کے کھانے سے دوران حمل عورت کو تکلیف کم ہوتی ہے صحت برقرار رہتی ہے اور اس کے ساتھ بچہ بھی صحت مند رہتا ہے ،۔تحقیق کے مطابق آم وہ پھل ہے جسے حمل میں کے دوران کھانے سے پیدا ہونے والے بچوں کارنگ گورا ہوتاہے

تاہم کسی بیماری میں مبتلا خواتین کو آم ڈاکٹرز کے مشورے سے استعمال کرنا چاہئیں۔ہر عورت کی یہ خواہش ہوتی ہے کہ اس کا بچہ خوبصورت پیدا ہو، ہمارے ہاں چونکہ خوبصورتی سے

مراد گورا رنگ لیا جاتا ہے۔لہذا ایسا بچہ جس کا رنگ گورا ہو وہی خوبصورت سمجھا جاتاہے۔ ماؤں کی شدید خواہش ہوتی ہے کہ ان کا بچہ گورا پیدا ہو‘ تازہ ترین تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ ایک پھل ایسا ہے جسے کھانے سے مائیں خوبصورت اور گورے چٹے بچوں کو جنم دے سکتے ہیں۔تحقیق کے مطابق آم وہ پھل ہے جسے حمل میں کے دوران کھانے سے پیدا ہونے والے بچوں

کارنگ گورا ہوتاہے۔ تاہم کسی بیماری میں مبتلا خواتین کو آم ڈاکٹرز کے مشورے سے استعمال کرنا چاہئیں۔ہر عورت کی یہ خواہش ہوتی ہے کہ اس کا بچہ خوبصورت پیدا ہو،ہمارے ہاں چونکہ خوبصورتی سے مراد گورا رنگ لیا جاتا ہے۔

آسمانی بجلی گرنے سے مشہور فٹبالر چل بسا

میچ کھیلتےہوئے جنوبی افریقہ کے فٹ بالر پر آسمانی بجلی گر گئی جس کی وجہ سے ان کی موت واقع ہوگئی ۔ مداح اور ٹیم ممبران غم سے نڈھال
جنوبی افریقا کے فٹ بالر رواں سال جنوری میں ایک دوستانہ میچ کھیلنے کے دوران آسمانی بجلی گرنے سے زخمی ہوگئے تھے۔ وہ اسپتال میں گزشتہ چار ماہ سے کومے کی حالت میں تھے

جہاں ان کا علاج جاری تھا تاہم وہ جانبر نہ ہو سکے۔ لیوندا فٹ بال کلب مارٹز برگ یونائیٹڈ کی نمائندگی کرتے تھے جو اس وقت جنوبی افریقا کی پریمیئر لیگ میں چوتھے نمبر پر ہےفٹ بال کلب مارٹزبرگ یونائیٹڈ نے اپنے 21 سالہ اسٹرائیکر لیویاندا نٹشنگزی کے انتقال کے خبر کی تصدیق کرتے ہوئےفیس بک پر جاری کردہ پیغام میں فٹ بالر کو خراج تحسین پیش کیا، ابھرتے

ہوئے کھلاڑی کی ناگہانی موت پر پوری ٹیم غم سے نڈھال ہے

یاد رہے کہ اس حادثہ میں ان کےساتھ دو اور کھلاڑی بھی شدید زخمی ہوئے تھے لیکن بروقت علاج کی وجہ سے ان کی جان بچ گئی لیکن لیویاندا اس کی وجہ سے قومہ میں چلے گئے تھے جو کہ گزشتہ روز اس قومہ ہی میں زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے

عدنان سمیع کی بھارتی شہریت پربڑے عرب ملک کے امیگریشن حکام نے ایسی گالی دے دی کہ گلو کار تلملا اٹھے ،بھارتی حکام بھی مدد کو نہ آئے کیونکہ۔۔۔

گلوکارعدنان سمیع نے کویتی امیگریشن حکام پر الزام عائد کرتے ہوئے دعویٰ کیا ہے کہ کویت ائرپورٹ پر ان کے اسٹاف کے ساتھ بدتمیزی کی گئی اور انہیں ’بھارتی کتے‘ کہا گیا۔

ہندوستان ٹائمز کی ایک رپورٹ کے مطابق عدنان سمیع کویت میں لائیو پرفارمنس کے لیے گئے تھے، جہاں یہ ناخوشگوار واقعہ پیش آیا۔رپورٹس کے مطابق عدنان سمیع نے کویت میں بھارتی سفارت خانے کے عملے سے رابطہ کیا تو وہاں سے کوئی مثبت جواب موصول نہیں ہوا، جس پر وہ مزید برہم ہوگئے۔ بعدازاں انہوں نے ٹوئٹر کا سہارا لیا اور اپنے پیغام میں کویت میں بھارتی سفارتخانے کو مخاطب کرتے ہوئے کہا،

‘ہم آپ کے شہر میں محبت بانٹنے آئے اور یہاں ہمارے ساتھ ایسا سلوک کیا گیا۔عدنان سمیع نے مزید لکھا کہ کویتی امیگریشن حکام نے بغیر کسی وجہ کے ان کے عملے کے ساتھ بدتمیزی کی اور انہیں ‘بھارتی کتے’ قرار دیا اور جب آپ سے رابطہ کیا گیا تو آپ نے بھی کچھ نہیں کیا، ان کی ہمت کیسے ہوئی اس طرح کا برتاو کرنے کی’۔

بعدازاں عدنان سمیع نے اپنی ٹوئیٹ میں بھارتی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ اور وزیر خارجہ سشما سوراج کو ٹیگ کیا۔جس پر سشماسوراج نے اس کا فوری جواب دیتے ہوئے لکھا کہ ’پلیز مجھ سے فون پر بات کریں’۔جبکہ وزیر مملکت برائے داخلہ کرن ریججو نے عدنان سمیع کو مخاطب کرتے ہوئے لکھا کہ ‘ہماری متحرک وزیر خارجہ اس معاملے کو دیکھ رہی ہیں’، تاہم بعدازاں یہ ٹوئیٹ ڈیلیٹ کردی گئی۔دوسری جانب عدنان سمیع نے بھارتی حکومت کے فوری اور مثبت جواب کا شکریہ ادا کیا۔

نیند نہ آرہی ہو تو کیا جائے

جدید سائنسی دور جہاں انسان کے لیے بےشمارآسائشیں اور سہولتیں لایا ہے وہاں نئی ایجادات نے اکثر لوگوں کو پرسکون نیند کے لطف سے بھی محروم کردیا ہے۔ آپ کو اپنے اردگرد بہت سے لوگ نیند نہ آنے کی شکایت کرتے نظر آئیں گے۔ اور جو زبان سے یہ شکایت نہیں کرتے ، ان کی جسمانی کیفیت دیکھ کر آپ بخوبی اندازہ لگا سکتے ہیں کہ اس کی آنکھیں اچھی نیند سے محروم ہیں۔ ایسے افراد یا تو اونگھتے ہوئے یا پھر تھکے ہوئے دکھائی دیتے ہیں۔

نیند کی کمی یا بے خوابی کا تعلق بہت سی چیزوں سے ہے۔ بعض دائمی امراض بھی بے خوابی کا سبب بن جاتے ہیں ۔ مثلاً ذیابیطس ، ذہنی دباؤ، موٹاپے اور دل کے امراض میں مبتلا افراد اکثر نیند کی کمی کی شکایت کرتے پائے گئے ہیں۔نیند کی کمی سے انسان نہ صرف دن بھر سست رہتا ہے اور اپنی ذمہ داریاں بہتر طورپر انجام نہیں دے پاتا بلکہ کم خوابی سڑکوں پر ہونے والےکئی مہلک حادثوں کی وجہ بھی بنتی ہے۔ اسی طرح کئی بار مشینوں پر کام کرنے والے بے خوابی کے مریض سنگین حادثات کی لپیٹ میں آجاتے ہیں۔ایک حالیہ جائزے سے ظاہر ہواہے کہ امریکہ میں تقریباً دس فی صد افراد شدید بے خوابی کے مرض میں مبتلا ہیں اور اس تعداد میں مسلسل اضافہ ہورہاہے۔ ماہرین کا کہناہے کہ نیند عیاشی نہیں ہے بلکہ انسان کی ایک اہم ترین بنیادی ضرورت ہے۔ماہرین کہتے ہیں کہ نیند کا علاج نیند لانے کی گولیاں اور دوائیں نہیں بلکہ زندگی گذارنے کے انداز میں تبدیلی لانا ہے۔ تاہم کم خوابیاور بے خوابی کی شدید صورتوں میں

ڈاکٹر سے مشورہ ضروری ہوتاہے کیونکہ بعض عوارض بھی نیند میں کمی کا سبب بنتے ہیں۔ماہرین کا کہنا ہے پرسکون اور اچھی نیند کے لیے ان طریقوں سے مدد مل سکتی ہے۔سونے کے لیے بستر پر جانے سے پہلے دن بھر کی پریشانیوں اور مسائل کو بھول جائیے اور ان کے بارے میں ہرگز ہرگز نہ سوچیئے۔ایسے وقت میں سونے کی کوشش کریں جب آپ تھکے ہوئے ہوں۔ہلکا پھلکا لباس پہنیں۔ تکیے کو سرکے نیچے اس انداز میں رکھیں کہ آپ کو آرام محسوس ہو۔ روشنی بجھا دیں ۔ کمرے کا درجہ حرارت ایسا ہونا چاہیے جس پر آپ سکون محسوس کریں۔اگر

بستر پر 15 منٹ تک لیٹے رہنے کے بعد بھی نیند آتی محسوس نہ ہوتو آنکھیں بند کر کے لیٹے رہنے کی بجائے کوئی ایسا کام شروع کریں جس سے ذہنی دباؤ میں کمی آئے اور آپ سکونمحسوس کریں۔ مثلاً کچھ پڑھیں یا کچھ لکھیں ۔ تاہم ٹیلی ویژن دیکھنے سے احتراز کریں۔رات کی پرسکون نیند کے لیے دن کے وقت قیلولہ نہ کریں۔سونے سے کم ازکم چار گھنٹے پہلےتک کافی یا چائے نہ پیئیں۔سوتے وقت سگریٹ یا تمباکو کی مصنوعات سے دور رہیں۔بھوکے پیٹ یا بہت زیادہ کھانے کے فوراً بعد سونے کی کوشش نہ کریں۔ بہتر نیند کے لیے ضروری

ہے کہ رات کا کھانا ہلکا پھلکااور زودہضم ہو۔باقاعدگی سے وزرش کی عادت اپنائیں اور رات کو سونے سے کم ازکم تین گھنٹے پہلے تک کوئی سخت ورزش نہ کریں۔
ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر بے خوابی کی وجہ سوتے میں سانس لینے پیش آنے والی رکاوٹیں ہوں تو ڈاکٹر سے مشورہ کرنا ضروری ہے ۔ کیونکہ سوتے میں آنکھ کھلنے کی وجہ پوری مقدار میں آکسیجن کا نہ ملنا ہوتا ہے۔ ایسی صورت میں بعض سنگین نتائج سامنے آسکتے ہیں جن میں آکسیجن کی کمی کے باعث دماغ کی کارکردگی کا متاثر ہونا، نیم بے ہوشی طاری ہونا ، خون کا زیادہ دباؤ اور دل کی بیماریاں شامل ہیں۔

قیامت کی نشانی جو کہ پوری ہو چکی ہے

اللہ رب العزت کفار کو قرآن میں‌مخاطب ہے کہ اس دن سے ڈرو جس کا خوف بچوں کو بوڑھا کر دے گی . اس آیت کا مصداق قیامت کا دن ہوگا جو اتنا خوفناک ہوگا کہ انسان کو کسی بات کا ہوش نہیں‌رہے گا .، حاملہ عورتوں‌کا حمل گر جائے گا. اور بچے اس دن کے غم سے بوڑھے ہو جائے گے . زمین پر سب کچ ختم ہو جائے سب کچھ تہس نہس ہو جائےگا اور صرف اللہ کی ذات باقی رہے گی . لیکن کچھ لوگوں نے جو کہ قرآن و سنت کے علوم سے بے

بلد ہے ان کے مطابق کسی بچے کا بوڑھا ہوجانا چاہئے قیامت سے پہلے ہی کیوں‌نہ ہو یہ بھی ایک قیامت کی نشانی ہے . حال ہی میں انڈیا کے اندر ایک بچہ پید اہوا . جو کہ دیکھنے میں‌عام بچوں کی طرح تھا . لیکن جیسے جیسے اس کی عمر گزرتی گئی ، اس

کی جلد بوڑھوں کی طرح ہوتی گئی اور تین سال کی عمر میں‌وہ بالکل ایسا لگ رہا تھا جیسے 120 سال کا بڈھا ہو . اس کے اعضاء ڈھیلے پڑھ گئے تھے اور اسے بھی بوڑھوں کی طرح جوڑوں کا درد شروع ہوگیا تھا . اور اس کے علاوہ اور بھی کافی بچے پیدا ہوئے جو کہ کافی کمزور اور بوڑھوں کی طرح تھے . تو قارئین ایسی کوئی آپ کو نشانی بتائے تو اسے آپ سمجھا سکتے ہیں کہ اس آیت کا تعلق قیامت سے ہے . قیامت کی ایک نشانی یہ بھی ہے جس کا ذکر حضرت ابو ھریرۃ رضی اللہ نے اپنی روایت میں‌کیا ہے . قیامت تب تک قائم نہیں ہوگی جب تک

مسلمان یہودیوں کے ساتھ قتال نہ کریں . مسلمان یہودیوں کو قتل کریں‌اور جب کسی درخت یا پتھر کے پیچھے چھپے گے تو وہ چیز خود بول پڑے گی . سوائے ایک درخت کے جس کانام غرقد ہوگا . یہ درخت یہودیوں کو پناہ دے گا . اس درخت کی اونچائی 4 سے 6 فٹ کے درمیان ہوتی ہے یہ درخت یہودی کمیونٹی پوری دنیا میں‌لگا رہی ہے اور اس کی کاشت کردہ تعداد 3 کروڑ سے زیادہ ہے. اور یہ درخت ان کا قومی درخت سمجھا جاتا ہے .’’انس رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: قیامت کی نشانیوں میں سے یہ ہے کہ علم اٹھا لیا جائے گا، جہالت بڑھ جائے گی، شراب پی جائے گی اور زنا عام ہو جائے گا۔‘‘

’’عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنھما سے روایت ہے کہ ۔۔۔ میرے والد عمر بن خطاب رضی اللہ عنہ نے مجھ سے بیان کیا کہ ایک دن جب کہ ہم نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے پاس بیٹھے ہوئے تھے،تو اسی دوران میں اچانک ایک بہت سفید کپڑوں اور انتہائی سیاہ بالوں والا آدمی نمودار ہوا۔۔۔۔ اس نے (نبی صلی اللہ علیہ وسلم سے) پوچھا ، مجھے قیامت کے بارے میں بتائیے (وہ کب آئے گی)؟ آپ نے فرمایا: جس سے پوچھا جا رہا ہے وہ اس کے بارے میں پوچھنے والے سے زیادہ نہیں جانتا۔اُس نے کہا، تو آپ مجھے اُس کی کچھ نشانیاں ہی بتا دیجیے ۔ آپ نے فرمایا: ایک نشانی یہ ہے کہ لونڈی اپنی مالکہ کو جن دے گی اور دوسری یہ ہے کہ تم (عرب کے) اِن ننگے پاؤں، ننگے بدن پھرنے والے (بکریوں کے) اِن کنگال چرواہوں کو بڑی بڑی عمارتیں بنانے میں ایک دوسرے سے مقابلہ کرتے دیکھو گے۔۔۔ ۔‘‘

حضرت ابوہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ اس شخص (حضرت جبرائیل علیہ السلام) نے کہا کہ قیامت کب ہوگی؟ آپ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا کہ جس سے یہ بات پوچھی جارہی ہے سائل سے زیادہ نہیں جانتا (بلکہ ناواقفی میں دونوں برابر ہیں) اور میں تم کو اس کی علامتیں بتائے دیتا ہوں، جب لونڈی اپنے سردار کو جنے اور جب سیاہ اونٹوں کو چرانے والے عمارتوں میں رہنے لگیں (تو سمجھ لینا کہ قیامت قریب ہے)
اگر بغور دیکھا جائےاتو ہمیں‌اس بات کا احساس ہوگا کہ یہ تمام نشانیاں پوری ہوچکی ہے او ر قیامت بہت قریب آگئی ہے اس لئے اپنے ایمان کی فکر کریں اس سے پہلے کے توبہ کا دروازہ بند ہو جائے

جگر معدہ مثانے کی گرمی کا علاج

نوجوانوں کا سب سے بڑا مسئلہ معدے مثانہ جگر کی گرمی کا ہےاس کے لیئے بہت سے نسخہ ہیں مگر ان کا رزلٹ سو فیصد نہیں ہے مگر معدے مثانہ جگر کی گرمی یہ جو سادہ سا نسخہ ہے اس کا رزلٹ الحمدللہ سو فیصد ہے اس نسخہ کی سب سے بڑی خوبی یہ ہے کہ بالکل آسانی سے بن جاتا ہے اور ہر جگہ دستیاب ہے گوند کتیرا، تخم بالنگو، بیہ دانہ،1 تولہ ان چیزوں کو لیں اور اس نسخہ کو استعمال کرنے کے لیے

ہوالشافی گوند کتیرا، تخم بالنگو، بیہ دانہ،1 تولہ ترکیب تیاری: تینوں اشیاء کو سادہ پانی میں رات کو بھگو دیں طریقہ استعمال: صبح اچھی طرح مل کرچھان لیں فضلہ کو نکال کر پھینک دیں اور پانی کو پی لیں فوائد: معدے مثانہ جگر کی گرمی کے لئیے یہ بہت شاندار نسخہ ہے، جو کہ بلڈ پریشر اور کولیسٹرول کو بھی ٹھیک کرنے میں معاون ہے۔ آخر میں اتنا ضرور کہوں گا کہ کسی کو اچھی اور میٹھی بات بتانا بھی صدقہ ہے۔

تو اگر آپ سمجھتے ہیں اس نسخہ سے کسی کا بھلا ہو سکتا ہے اس کو شیئر ضرور کریں۔ اور اگر آپ سمجھتے ہیں ہم نے یہ جو نسخہ جات شیئر کرنے کا سلسلہ شروع کیا ہے اچھا ہے تو آپ ہماری ویب سائیٹ کو چندہ ضرور دیں تاکہ ہم اس سلسلہ کو جاری و ساری رکھ کیں شکریہ اور مردانہ طاقت کے مزید نسخوں کے لیئے یہاں کلک کریں اور کال شام 6 سے رات 10 بجے تک ہی کر زیادہ سے زیادہ دیکھیں اور مرض سے نجات حاصل کریں جیسا کے آج کا دور ہے ہر دوسرا بندا اس مرض کا شکار ہے جو کہ ماہرطب بھی پریشان ہیں تو گرمی کے موسم میں کوشش کریں کہ پانی زیادہ پیا جائے اور تیل والی یا تلی ہوئی چیزیں کم کھائی جایئں جس سے ایسے مرض میں کمی آئےگی۔

قد لمبا کرنے کے گھریلو ٹوٹکے چھوٹے قد کےافراد کے لیے بڑی خوشخبری

اسلام علیکم دوستو آج قد لمبا کرنے کا بہت ہی امیزنگ ٹوٹکہ لے کر آیا ہوںبہت ہی اہم ایک ٹوٹکہ لے آپ کو بتانے جا رہا ہوںجس کی مدد سے آپ انشا ء اللہ ایک ماہ میں ایک فٹ قد بڑھا سکتے ہیںیہ نسخہ دس سال سے چوبیس سال تک کی لڑکی او ر لڑکے استعمال کر سکتے ہیںاس سے اوپر نہیں یعنی کے چوبیس سال کے اور والے لڑکیا ں اور لڑکے اس نسخہ کو استعمال نہیں کر سکتے ۔دوستوآج میں آپ کے ساتھ ایک بہت ہی امیزنگ نسخہ شیئر کرنے جا رہا ہوںآپ اپنی چھوٹی ہائیڈ سے پریشان ہیں یا لوگ آپ کو تانے دیتے ہیں

کہ اس کا قد چھوٹا ہے اس لڑکی کا رشتہ نہیں ہو رہا لڑکی کا قد چھوٹا ہے اس کے علاوہ اور بہت وجوہات ہوتی ہیںاب پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے چاہے وہ لڑکیا ں ہے یا لڑکے ہیںکسی کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے یہ نسخہ آپ غور سے پڑھ لیں انشاء اللہ آپ کا قد بڑھے گا انشا ء اللہ وہ چیزیں کونسی ہیں جن کو استعمال کر کے قد میں اضافہ کیا جا سکتا ہے پہلے نمبر پر آپ نے لینی ہے حبول رشاد یہ لینی ہے آپ نے یہ کسی بھی پنسار کی دکان سے

مل جائے گا آکو اس کو 150گرام لینا ہے دوسرے نمبر پر آپ نے لینے ہے سنگھارا خشک سنگھارا آپ کو یہ کسی بھی پنسار کی دکا ن سے مل جائے گا 50گرام آپ نے خشک سنگھارا لے لینا ہے اس کے بعد آپ نے لینی ہے مسری اس کا فائدہ تو کوئی نہیں اس کو ہم اس لیے استعمال کر رہے ہیں کے نسخے کا زائقہ چینج کرنا ہے تھوری سی مٹھا س پیدا کرنی ہے

اس میں مسری اس لیے ہم اس میں ایڈ کر رہے ہیںمسری بھی لینی ہے 150گرام اور آخر میں ہم لیں گے مستقی رومی اگر ان سب چیزوں کی کو دیکھنا ہے تو اوپر ویڈیو میں تصویریں دیکھ سکتے ہیں مستقی رومی کو لینا ہے 25 گرام یہ سب چیزیں لینی ہے آپ نے ان کو لینے کے بعد کیسے بنانا ہے سب سے پہلے ان چیزوں کو آپ ایک ایک کر کے پیس لیںاور تمام چیزوں کو آپس میں ملالیںاس میں آپ نے کوئی چیز نہیں ملانی پانی وغیرہ صرف اس کو سفوف بنا کہ آپس میں ان کو مکس کر لینا ہے اور دس سال سے لے کر چوبیس سال کے افراداس کو صبح نہار منہ ایک چمچ آپ نے پوڈر کی لی جو سفوف آپ نے تیار کی اور اپر سے ایک گلاس دودھ کا خالص دودھ کوئی بھی لے سکتے ہیں بھینس کا ہو گائے کا ہو یا ہو بکڑی کاصبح اور شام آپ نے اسی طریقے سے ہی اس نسخے کو استعمال کرنا ہے اور صرف ایک ماہ آپ اس کو استعمال کریں

جن افراد کے پائوں کی دوسری انگلی بڑی ہے وہ یہ خبر ضرور پڑھ لیں

چینی ماہرین کا ماننا ہے کہ پاؤں کی انگلیاں انسان کی شخصیت کی عکاسی کرتے ہیں۔انگلیاں کچھ اسطرح شخصیت کی عکاسی کرتی ہیں۔ اگر آپ کی پاؤں کا انگوٹھا دیگر انگلیوں کے مقابلے میں بڑا اور موٹا سا ہے، اس کا مطلب آپ بہت ذہین اور تخلیفی انسان ہیں اور آپ اپنے ارد گرد میں ہونے والی چیزوں کو الگ زاویے سے دیکھتے ہیں۔ اگر آپ کا انگوٹھا دیگر انگلیوں کے مقابلے میں چھوٹا سا ہے۔جاری ہے۔

اس کا مطلب آپ دوسروں سے بہت جلدی متاثر ہوجاتے ہیں اور آپ اپنی دنیا میں مگن رہنے والے انسان ہیں۔ اگر آپ کی دوسری انگلی تمام انگلیوں سے بڑی ہے ، اس کا مطلب آپ کا رویہ لیڈروں والا ہےاور ایسے لوگوں میں حکم چلانے کی عادت بہت زیادہ موجود ہوتی ہے۔جن افراد کی دوسری انگلی چھوٹی ہے، وہ افراد بس اپنی من مانی کرتے ہیں اور دوسروں کے ساتھ ان کی کوئی ہم آہنگی نہیں ہوتی۔جن افراد کی تیسری انگلی دیگر انگلیوں سے بڑی ہوتی ہے ، ایسے افراد جس چیز کی ٹھان لیتے ہیں ، اس کام کو سرانجام کرکے ہی دم لیتے ہیں اور ایسے افراد ہر چیز میں کمال مہارت رکھتے اور چاہتے ہیں۔جاری ہے۔

ہر چیز پرفیکٹ ہو۔ اس کے برعکس وہ افراد جن کی تیسری انگلی چھوٹی ہوتی ہے ، ایسے افراد اپنی زندگی کو بھرپور انجوئے کرتے ہیں۔ ایسے افراد اپنی زندگی کے ہر پہلو پر کام کرتے ہیں۔جن فراد کی چوتھی انگلی دیگر انگلیوں سے بڑی ہوتی ہے، ایسے افراد کےلیے ان کی فمیلی سب کچھ ہوتی ہے۔ اگر چوتھی انگلی میں ذرا سا خم موجود ہے اس کا مطلب ایسے افراد کو رشتوں میں محبت کی کمی کا سامنا ہے۔لیکن یہ افراد بہت اچھے سننے والے ہوتے ہیں، لوگ ان سے جو بھی بات کریں ،یہ افراد خاموشی سے ساری بات کو سنتے ہیں۔جن افراد کی چوتھی انگلی چھوٹی ہوتی ہے،۔جاری ہے۔

ایسے افراد کو نہ فیملی کی فکرہوتی ہے اور نہ ہی اپنے دوستوں کی۔ یہ افراد اپنی زندگی میں مست ہوتے ہیں۔ جن افراد کی پاؤں کی آخری انگلی چھوٹی ہوتی ہے ، ان افراد کا رویہ بچوں جیسا ہوتا ہے، یہ افراد کوئی بھی ذمہ داری نہیں لیتے اور ہر وقت ہنسی مذاق کرتے رہتے ہیں اور یہ لوگ چیزوں سے بہت جلدی بور بھی ہوجاتے ہیں۔وہ افراد جو اپنے پاؤں کی آخری انگلی کو باآسانی حرکت دے سکتے ہیں۔ایسے افراد بہت بہادر اور موج مستی کرنے والے ہوتے ہیں

مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول کریں ۔↓↓↓۔

 

نقیب قتل کیس !رائو انوار کو ایسی رعایت دے دی گئی کہ سب حیران رہ گئے‎

کراچی(قدرت روزنامہ) نقیب قتل کیس کے 11 ملزمان کا مجرمانہ ریکارڈ مرتب، راو انوار کرمنل ریکارڈ مینجمنٹ سسٹم میں رجسٹرڈ نہیں، پولیس حکام نے ایک دوسرے پر ذمے داری ڈال دی.نقیب محسود قتل کیس میں گرفتار ڈی ایس پی سمیت 11 ملزمان کو تو سندھ پولیس کے کرمنل ریکارڈ مینجمنٹ سسٹم میں رجسٹرڈ کرلیا گیا ہے لیکن سابق ایس ایس پی ملیر راو انوار احمد کی سی آر او میں ابھی تک رجسٹریشن نہیں کی گئی.
پولیس ذرائع کے مطابق سندھ میں جرائم پیشہ افراد کا ریکارڈ مرتب کرنے کیلئے کرمنل ریکارڈ آفس کا قیام 1964 میں عمل آیا لیکن باقاعدہ ریکارڈ رکھنے کا عمل سال 1972 کے بعد شروع کیا گیا تھا.سی آر او میں مقدمات کے تحت گرفتار ملزمان کی تصاویر، فنگر پرنٹس اور دیگر تفصیلات مشتمل کی جاتی ہیں پولیس ذرائع کے مطابق جیب تراشی جیسا معمولی جرم ہی کیوں نہ ہو کسی بھی الزام کے تحت درج مقدمے میں گرفتار کسی بھی ملزم خواہ وہ سیاسی لیڈر، حکومتی عہدیدار، وزیر، مشیر یا سرکاری افسر ہی کیوں نہ ہو کو سی آر او میں شامل کیا جانا اہم قانونی تقاضا ہے.راو انوار احمد کے معاملے میں پولیس نے ایسے تمام قانونی تقاضوں کو بالائے طاق رکھا اور ڈیڑھ ماہ سے زائد عرصے سے گرفتار اس وی آئی پی ملزم کو ابھی تک کرمنل ریکارڈ آفس یا حال ہی میں سندھ پنجاب کے مشترکہ کرمنل ریکارڈ مینجمنٹ سسٹم میں رجسٹرڈ نہیں کیا گیا ہے.اسی مقدمے میں گرفتار ڈی ایس پی قمر احمد شیخ کو سی آر ایم ایس نمبر 60678 جاری کیا گیا ہے، اسی طرح سب انسپکٹر محمد یاسین کو 59279، اے ایس آئی سپرد حسین 59277، اللہ یار 59287،
ہیڈ کانسٹیبلز شکیل فیروز 64797، خضر حیات 59279، محمد اقبال 59283، کانسٹبلز غلام نازک 60194، شفیق احمد 60195، عبدالعلی 60189 اور ارشد علی کو نمبر 59291 رجسٹرڈ کیا گیا ہے.واضح رہے کہ نقیب قتل کیس میں سابق ایس ایس پی راو انوار سمیت 12 ملزمان گرفتار جبکہ 13 فرار ہیں. اس حوالے سے ایس پی انوسٹی گیشن ملیر عابد قائم خانی نے بتایا کہجب تک تفتیش ان کے پاس تھی اس وقت تک گرفتار 10 ملزمان کی سی آر ایم ایس میں فوری طور پر رجسٹریشن کرادی تھی.راو انوار کو گرفتاری کے بعد کراچی منتقل کرتے ہی کسٹڈی اور مقدمہ کی تفتیش ایس ایس پی سینٹرل ڈاکٹر رضوان کے سپرد کردی تھی. جبکہ اس حوالے سے ڈاکٹر رضوان خان کا کہنا ہے کہ راو انوار کا ریمانڈ سابق تفتیشی افسر ایس پی عابد قائم خانی اور ایس ایس پی ملیر عدیل چانڈیو کی ٹیم نے لیا تھا انہیں راو انوار کی کسٹڈی کئی دن بعد دی گئی.انہوں نے کہا کہ کرمنلز ریکارڈ آفس کیلئے ڈیٹا جیل میں لیا جاسکتا ہے. یہ اہم پوائنٹ سامنے آنے پر حکومت اگر چاہے تو جیل میں بھی راو انوار کی کرمنل ریکارڈ مینجمنٹ سسٹم میں رجسٹریشن کی جاسکتی ہے.